2 Line Urdu Love Poetry Pics – Urdu Shayari

2 Line Urdu Love Poetry Pics

Kh Main Ny Ulft Kh Tqazon Ko Nbhaya Aksr

Murshid!Aur Logo Ny Mera Drd Barhaya Aksr

-::-

کہ میں نے الفت کہ تقاضوں کو نبھایا اکثر

مرشد ! اور لوگوں نے میرا درد بڑھایا اکثر

——————

Broz e Mhshr Sawal Ho Ga Muhabbaton Ka

Murshid!Main Sochta Ho Tere Jaiso Ka Kia Ho Ga

-::-

بروز محشر سوال ہو گا محبتوں کا

مرشد ! میں سوچتا ہو تیرے جیسو کا کیا ہو گا

——————-

Muhabbat Kaid Hai Is Kaid Kh adi Na Ho Jana

Murshid! Salahein Toot Jain Tou Rahai Maar Daiti Hai

-::-

محبت قید ہے اِس قید کہ عادی نا ہو جانا

مرشد ! صلاحئین ٹوٹ جائیں تو رہائی مار دیتی ہے

—————

Murshid!Usay Khna Kh Jlde Loot Aye

Murshid!Ajae Kh Is Sy Phle Moot Aye

-::-

مرشد ! اسے کہنا کہ جلدی لوٹ آئے

مرشد ! آجائے کہ اِس سے پہلے موت آئے

——————-

Murshid!Jo Tere Sath Rhte Howe Bhi Sogwar Ho

Murshid!Lanat Ho Aise Shaks Pr Aur Bey Shumar Ho

-::-

مرشد ! جو تیرے ساتھ رہتی ہوئے بھی سوگوار ہو

مرشد ! لعنت ہو ایسے شخص پر اور بے شمار ہو

——————-

Phir Barishein Tou Honi Hi Thi

Murshid!Main Ny Dukh Jo Suna Ny Thy Hawao Ko

-::-

پِھر بارشیں تو ہونی ہی تھی

مرشد ! میں نے دکھ جو سنا نے تھے ہواؤں کو

———————-

Khuwahish Tou Na Thi Kisi Sy Dil Lagane Ki

Murshid!Qismt Main Drd Likha Tha Muhabbat Kaisy Na Hoti

-::-

خواہش تو نا تھی کسی سے دِل لگانے کی

مرشد ! قسمت میں درد لکھا تھا محبت کیسے نا ہوتی

——————

Smbhl Kh Kiya Kro Auro Sy Hmari Burai

Murshid!Tumhare Jo Aziz Hain Wo Hmare Murid Hain

-::-

سمبحل کہ کیا کرو اوروں سے ہماری برائی

مرشد ! تمھارے جو عزیز ہیں وہ ہماری مرید ہیں

——————–

Hum Ny Usko Likha tha Kuch Mil Ny Ki Tdbir Kro

Us Ny Jawab Main Likha Waqt Mila Tou Sochein Ge

-::-

ہم نے اسکو لکھا تھا کچھ مل نے کی تدبیر کرو

اس نے جواب میں لکھا وقت ملا تو سوچیں گے

—————-

Sari Raat Guzri In Hsabun Main Murshid!

Usay Muhabbat Thi Nhi Thi Hai Yh Nhi Hai

-::-

!ساری رات گزری ان حسابون میں مرشد

اسے محبت تھی نہیں تھی ہے یہ نہیں ہے

——————

Hqiqt Jaan Kr Bhi Aisi Himakt Kon Krta Hai

Bhala Bay Faiz Logo Sy Muhabbat Kon Krta Hai

-::-

حقیقت جان کر بھی ایسی حیماکت کون کرتا ہے

بھلا بے فیض لوگوں سے محبت کون کرتا ہے

—————

Btao Jis Tjart Main Khsara Hi Khsara Ho

Bhala Khsare Ki Tjart Kon Krta Hai

-::-

بتاؤ جس تجارت میں خسارا ہی خسارا ہو

بھلا خسارے کی تجارت کون کرتا ہے

——————-

Kh Kat Gai Tere Bgair Bhi

Murshid!Ugri Hoi,Loti Hoi, Weran Zindagi

-::-

Ishq Agr Haak Na Krdy Ay

Murshid!Tou Kya Haak Ishq Howa

-::-

عشق اگر ہاک نا کردے

مرشد ! تو کیا ہاک عشق ہوا

——————

Loota Kr Ishq Ki Dolt Hride Ay Hain Khoon Kh Ansoo

Murshid!Mili Hai Jo Ishq Main Hum Ko Zra Jagir Tou Daikho

-::-

لوٹا کر عشق کی دولت حریدی اے ہیں خون کہ آنسو

مرشد ! ملی ہے جو عشق میں ہم کو زرا جاگیر تو دیکھو

———————

Kitni Azyt Hai Is Ahsaas Main

Murshid!Muje Tum Sy Mily Bina Hi Mar Jana Hai

-::-

کتنی ازیت ہے اِس احساس میں

مرشد ! مجھے تم سے ملے بنا ہی مر جانا ہے

—————–

Wo Bik Chuke Thy Jb Hum Khridne Kh Kabil Howe

Murshid!Zmana Beet Gaya Humein Ameer Hoty Hoty

-::-

وہ بک چکے تھے جب ہم خریدنے کہ قابل ہوئے

مرشد ! زمانہ بیت گیا ہمیں امیر ہوتے ہوتے

—————–

Tumhein Bs Hazar Tak Ati Ginti

Hye Murshid! Lakhon Khamiyan Hain Muj Main

-::-

تمہیں بس ہزار تک آتی گنتی

ہائے مرشد ! لاکھوں خامیاں ہیں مجھ میں

———————-

Sare Ilzam Apny sar Le kr

Hye Murshid!Hum Ny Tum Ko Maaf Kr Daala

-::-

سارے الزام اپنے سَر لے کر

ہائے مرشد ! ہم نے تم کو معاف کر ڈالا

——————–

Aya Tha aik shaks Mere Dukh Ko Bant ne

Rukhsat Huwa Tou Apna Bhi Gam Dy Gaya Muje

-::-

آیا تھا ایک شخص میرے دکھ کو بانٹ نے

رخصت ہُوا تو اپنا بھی غم دے گیا مجھے

———————

Kh Chandni Chaand sy Hoti Hai Sitaron Sy Nhi

Murshid!Muhabbat Ak Sy Hoti Hai Hazaro Sy Nhi

-::-

کہ چاندنی چاند سے ہوتی ہے ستاروں سے نہیں

مرشد ! محبت اک سے ہوتی ہے ہزاروں سے نہیں

——————

Nazar Ane Wale Zakham Tou Sabhi Daikh Lay ty Hain

Murshid!Koi Aisi Ankhain Lao Jo Choo pay Howe Zakham Bhi Daikhay

-::-

نظر آنے والے زخم تو سبھی دیکھ لے تے ہیں

مرشد ! کوئی ایسی آنکھیں لاؤ جو چھو پے ہوئے زخم بھی دیکھے

————————-

Tuje Lay Kr Mera Khayal Nhi Bdlay Ga

Murshid!Saal Tou Boht Badlain Gy Pr Mera Pyaar Nhi Bdly Ga

-::-

تجھے لے کر میرا خیال نہیں بدلے گا

مرشد ! سال تو بہت بدلیں گے پر میرا پیار نہیں بیڈلی گا

—————–

Hussan Waly Loog

Hye Murshid!Dhoky Bhi Brr ay Hassin Daity Hain

-::-

حسن والے لوگ

ہائے مرشد ! دھوکے بھی برے حسین دیتے ہیں

——————-

Jhuki Jhuki Si Nazrein Bay Qrar Hain Kh Nhi

Thora Thora Sa Sahi Dil Main Pyar Hai Kh Nhi

-::-

جھکی جھکی سی نظریں بے قرار ہیں کہ نہیں

تھوڑا تھوڑا سا سہی دِل میں پیار ہے کہ نہیں

———————

Ja bhechr ja magr

Yh Na Ho Umer Bhar Malaal Rhy

-::-

جا بحیچر جا مگر

یہ نا ہو عمر بھر ملال رہے

———————

Duri Tou Wo Kb Sy Bana Rhi Thi

Bs Alag Ab Howe Hain Hum

-::-

دوری تو وہ کب سے بنا رہی تھی

بس الگ اب ہوئے ہیں ہم

——————–

Chal Muj Sy Ishq Dubara Kr

Murshid!Main Phir Sy Dhage Bandhon Minat Kh

-::-

چل مجھ سے عشق دوبارہ کر

مرشد ! میں پِھر سے دھاگے باندھوں منت کہ

——————

Chihne ny Lag Gai Andr Ki Udasi Muj Sy

Main Ny Ro Roo Kh Tuje Itna Pukaara Yaara

-::-

چیحنے لگ گئی اندر کی اُداسی مجھ سے

میں نے رو رُو کہ تجھے اتنا پکارا یارا

———————-

Yaar Bhi Raah Ki Diwar Smjta Hai Muje

Main Smjta Tha Mera Yaar Smjta Hai Muje

-::-

یار بھی راہ کی دیوار سمجھتا ہے مجھے

میں سمجھتا تھا میرا یار سمجھتا ہے مجھے

———————-

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *